سنتا لیس سالہ ارب پتی آدمی کی انٹرنیٹ پر نوجوان لڑکی سے ملاقات، فوراً ہی پیار ہوگیا، شادی کرلی لیکن پھر


عمر بھر کا رشتہ استوار کرنے سے پہلے بہت کچھ دیکھنا ضروری ہوتا ہے۔ کبھی بزرگ رشتہ ڈھونڈنے نکلا کرتے تھے اور شکل و صورت سے لے کر تعلیم اور خاندانی پس منظر تک ہر بات کی تسلی کیا کرتے تھے، لیکن شاید سوشل میڈیا کے جدید دور میں یہ سب کچھ غیر ضروری قرار پا گیا ہے۔ آج کل انٹرنیٹ پر ملاقاتیں ہوتی ہیں اور پھر دیکھتے ہی دیکھتے بات محبت اور شادی تک بھی پہنچ جاتی ہے، مگر ایسی جلدی اور بے احتیاطی کا نتیجہ کچھ اچھا نہیں ہوتا۔ ادھیڑ عمر برطانوی بزنس مین بیری پرنگس کے ساتھ پیش آنے والا المناک واقعہ بھی اسی غلطی اور اس کے عبرتناک انجام کی مثال ہے۔

اخبار دی مرر کی رپورٹ کے مطابق یوکرین میں بیری کی ناگہانی موت سے متعلق برطانیہ میں جاری مقدمے میں ان کے قریبی دوست پیٹر کلفرڈ نے ڈیوان کاﺅنٹی ہال کی عدالت کو بتایا کہ 2007ءمیں بیری کی ملاقات انٹرنیٹ کے ذریعے ایک یوکرینی لڑکی زیوزینا سے ہوئی تھی اور 2008ءمیں انہوں نے شادی کر لی تھی۔ عدالت کو بتایا گیا کہ زیوزینا دراصل ایک فحش رقاصہ تھی لیکن اس نے ڈیٹنگ ویب سائٹ پر خود کو ایک ٹیچر ظاہر کررکھا تھا۔ بیری اپنے کاروبار کے سلسلے میں اکثر یوکرین آتے جاتے رہتے تھے اور انٹرنیٹ پر شناسائی بڑھنے کے بعد انہوں نے یوکرینی دارالحکومت کیف میں زیوزینا سے پہلی ملاقات کی۔ بیری کے بھائی شوگان نے بتایا کہ جنوری 2007ءمیں ان کی شادی ہوئی اور ایک سال بعد، جب بیری کیف میں ہی تھا، تو انہیں زیوزینا کا ٹیلی فون آیا۔ اس نے بتایا کہ بیری سڑک پر حادثے میں ہلاک ہوگیا تھا۔ بیری کے والدین کو بتایا گیا کہ وہ کیف میں ایک ریسٹورنٹ کے باہر ٹیکسی کا منتظر تھا کہ ایک تیز رفتار گاڑی نے اسے کچل دیا۔

 بیری کے بھائی شوگان کا کہنا تھا کہ انہیں شروع سے ہی شک تھا کہ اس کے بھائی بیری سے عمر میں 20 سال چھوٹی لڑکی زیوزینا کو آخر اس میں کیا دلچسپی ہو سکتی تھی۔ بھائی کی حادثاتی موت کی خبر سن کر انہیں یقین ہوگیا تھا کہ اسے ہلاک کروانے والی زیوزینا ہی تھی۔ انہوں نے سچ جاننے کے لئے یوکرین میں ایک پرائیویٹ سراغ رساں کی خدمات حاصل کیں اور حقائق تک پہنچنے کے لئے ایک لاکھ پاﺅنڈ (تقریباً ڈیڑھ کروڑ پاکستانی روپے) صرف کئے۔ سراغ رساں نے تحقیقات کیں تو انکشاف ہوا کہ بیری کی ہلاکت کے فوری بعد ہی زیوزینا نے اس کے اکاﺅنٹ سے لاکھوں پاﺅنڈ نکلوالئے تھے جبکہ اس کا گھر اور گاڑی بھی بیچ ڈالی تھی۔ اس کی سرگرمیوں کی نگرانی سے سراغ رساں نے یہ بھی معلوم کر لیا کہ وہ بیری کی ہلاکت میں براہ راست ملوث تھی، اور اس نے اپنے شوہر کی کروڑوں پاﺅنڈ کی دولت ہتھیانے کے لئے یہ جرم کیا۔
بیری کی حادثاتی موت کے متعلق پہلے ہی تحقیقات جاری تھیں، لیکن اس کی جواں سال اہلیہ کے متعلق انکشافات سامنے آنے کے بعد حادثاتی موت کے امکان کو رد کرتے ہوئے اب قتل کے زاویے سے تحقیقات کی جا رہی ہیں۔

You cannot copy content of this page