آخر 23 ستمبر کو کیا ہوگا؟


کیا ایلین حملہ کریں گے؟ کیا آسمان پر کچھ نیا دکھےگا؟یا پھر سمندر میں کوئی ہلچل ہوگی؟ پوری دنیا میں خاص طور پر یورپ میں23سمتبر کو ایلین سے جوڑا جا رہا ہے اس کے علاوہ بھی افواہ گردش کر رہی ہیں کہ آسمان پہ کچھ نیا دکھےگا۔ لیکن حقیقت کیا ہے ؟ اگر ہم یورپین تاریخ ماہ و سال کا جائزہ لیں تو اس میں ہمیںستمبر کا مہینہ خاص دلچسپ نظر آئے گا جب مسلمان علم وحکمت کے بلند معیار پر تھے تب یورپ کے بازار کیچڑ اور گندگی سے بھر پور تھے جبکہ ظاہری ٖغلاظت کے علاوہ ان کے ذہنوںمیں تہمات کی بھی خاصی بھر مار تھی، آج کا یورپ جانور پر بہت زیادہ مہربان نظر آتا ہے جب کہ 16,15صدی میں یہی قوم پورا سال گلیوں بازاروں سے کالی بلیاں اکھٹی کرتی تھی پھرسال کا ایک مخصوص مہینہ مقرر کیا جاتا ، جس کے مقررہ تاریخ کو ایک بڑے میدان میں آگ کا آلائو روشن کیا جاتا ،اماوس کی رات ہوتی تھی اور اس رات کے پچھلے پہر میں بیچاری بلیوںکو لوہے کے بانس سے لٹکا کر آگ میں جلایا جاتا تھا کیونکہ یورپین کا عقیدہ تھا کہ بلی شیطان کی جاسوس ہے لہذا سے مار دیا جائے تو شیطان ہمیں دیکھ نہیں پائے گا، تاریخی معلومات کے مطابق یورپی سارا سال تہمت کی دلدل میں گزارتے ، اور سال کے وسط یاآخری مہینوں میں ان تہمت کا کھل کر اظہار کرتے تھے جس میں ستمبر اور دسمبر کی سیاہ راتیں بہت اہم ہوتی ہیں ۔آج کا یورپ اگرچہ کل سے بہت مختلف ہے اس نے بہت ساری تہمات سے پیچھا چھڑوا لیا ہے کائنات کی تسخیر ان کا اگلا قدم ہے لیکن ہمیشہ کچھ خوف ایسے ہوتے ہیں جن کا وجود کھبی ختم نہیں ہوتا یا پھر کچھ طاقتیں ان تہمات نفسیاتی خوف کو ضایا نہیں ہونے دیتی جس کے پیچھے ان کا ذاتی مفاد چھپا ہوتا ہے ، 23 سمتبر کے حوالے سے میری تحقیق یہ ہے کہ ناسا(NASA) پچھلے ایک سال سے بلکہ دو سال سے عجیب و غریب خبریں نشر کر رہا ہے مثلا خلاء سے ہمیں پراسرار سگریٹ مل رہے ہیں لگتا ہے ایلین حملہ کر یں گے یا پھر ستارے مدار بدل رہے ہیں جو کے کسی بڑی مصیبت کا پیش خیمہ ہے، حال ہی میں ان دنوں میں ماہر فلکیات نے رپورٹ جاری کی کہ 23 ستمبر2017 آسمان پر ستاروں کے ایک جھنڈ ( (Virgo میں اہم تبدیلیاں رونما ہوں گی جو کے عام سی خبر ہے البتہ یورپی پادریوں نے اس خبر کو اس قدر اہم بنا دیا ہے کہ قدیم یورپی تہمات کا خوف ایک بار پھرتازہ ہوگیا ہے ۔عیسا ئیوں کے نزدیک ((Virgo نامی ستاروں کا جھنڈ حضرت مریمؑ کا ادھور ا مجسم ہے ان کا یہ بھی خیال ہے کہ یقین 23 ستمبر کو یسومسیحی آئیںگے اور تیسری جنگ عظیم کا آغاز ہو گا اگر ایسا نہ بھی ہوا تو زمین پر ایک بڑی تباہی ضرور آئے گی ۔ یاد رہے سمتبر اور دسمبر کا مہینہ یورپ کیلئے خاص نفسیاتی دبائوکا مہینہ ہوتا ہے اس کے پیچھے دو اہم چیزیں ہیں پہلا قدیم یورپی تہمات، دوسرا ان نفسیاتی تہمات کا دبائو برقرار رکھنے کیلئے بنائی گئی درجن بھر سے زائد ہالی ووڈ موویز اور بے شمار ناول اور افسانے جس میں ستمبر اور دسمبر میں زمین کو تباہ ہوتے دیکھایا گیا ہے یہی وجہ ہے کہ ستمبر اور دسمبر اجزیاتی اور فلکیاتی تبدیلی پر نشر ہو نے والی عام سی خبر بھی بہت ذیادہ مقبولیت حاصل کر جاتی ہے ۔ سوال یہ ہے کے آخر کیوں جدید یورپ کو اسطرح کے تہماتی خوف میں گھر کیا جا رہا ہے، 2015 2012 2001اور آج 2017 میں یورپ کو ایک ہی خوف کا مسلسل سامنا ہے اور خوف میں مزید اضافے کیلئے فلم سازی کی جارہی ہے نیوز سازی کی جا رہی ہے ۔ آخر اس سب کے پیچھے وجہ کیا ہے؟ حقیقت یہ ہے کہ شیطانی طاقتیں نیو ورلڈآرڈر کیلئے ایک ہوچکی ہیں جب کہ دوسری طرف ان طاقتوں کے خلاف یورپ میں کئی تاریخیں بھی پھوٹ پڑی ہیں جن کا ہجوم روز بروز بڑ رہا ہے ان پر نفسیاتی دبائو قائم کرنے کیلئے اور پوری دنیا کوذہنی طور پر عالمی ایجنڈو اور عالمی تخریب کاری کا شکار ہونے کیلئے عالمی طاقتیں (NASA) اور میڈیا کے ذریعے لوگوں کو ذہنی طور پر تیار کر دیں تاکہ ہولوگرام کاروائی سے پہلے ایلین وار سے پہلے یا پھر دیگر ایجنڈوں کے استعمال سے پہلے لوگ اس قدر ہراساں ہوں کہ قابلِ فکر مذاحمت نہ کر سکیں آپ میری اس بات سے بھی اتفاق کر یں گے کہ ہم ایشین وہ قوم ہیں جن کی آنکھوں پر پٹی بندی ہے ہمارا ہاتھ یورپ کا بازو تھامے چلا رہا ہے یہی وجہ ہمیں اپنا دین ایمان اور سخاوت نظر نہیں آتی، بلکہ ہمیں جو کچھ یورپ رعطاء کر ے وہی ہمارے لئے سب کچھ ہو چکا ہے ان کے تہوار انکی تہذیب ہماری ہوچکی ہے وہ ہنسے تو ہم ہنستے ہیں وہ روئیں تو ہم ان کے انداز نقل کرتے ہیں ، لیکن یاد رکھنا شیطانی طاقتوں کیلئے کوئی مذہب مذہب نہیں ہے ان کا اپنا ایک مذہب ہے جسے وہ یورپ پر قدیم تہمات کی آڑ میں ٹھوسیں گے ستمبراور دسمبر کے وہ دن جب یورپ میں پراسراریت انتہاتک پہنچ جاتی ہے انہیں یقین ہوتا ہے کہ بہت جلد کوئی ایسی خبر آنے والی ہے کہ بہت جلد آسمان سے آفت اترنے والی ہے ایسے لمحوں میں شیطانی طاقتیں خدا کا روپ بن کر نازل ہوںگی یا پھر کسی دوسری دنیا کی مخلوق بن کر حملہ کریں گی جس سے نیوولڈ آرڈر کا قیام ہوگا لیکن یہ سب اتنی جلدی نہیں ہوتایہ باقاعدہ ایک لونگ ٹرم منصوبہ ہے جسے دھیرے دھیرے مکمل کیا جائے گا اگر شیطانی طاقتوں کو یا عالم تخریب کاروں کو یورپ میں کسی قسم کی تخریب کاری کرنی ہے تو یہ دو ماہ انہیں بہتریں موقع فراہم کرتے ہیں کیونکہ ان دنوں یورپین کی نفسیاتی ہیلتھ خاصی پتلی ہوچکی ہوتی ہے ، یاد رکھئیے ہم نے اپنے آئیڈیل نہ بدلے ہم اپنے مذہب اور سخاوت کی طرف نہ بڑھے تو ممکن ہے اہل یورپ کے ساتھ ہم بھی ہمیشہ کیلئے ذلیل ہوجائیں گئے ۔ 23 ستمبر کو کچھ نہیں ہوگا ، ستمبر یورپین کے تہمات کا مہینہ ہے ہر سال وہ یہ مہینہ بڑے مشکوک انداز میں گزارتے ہیں

دلچسپ عنوان
  اللہ کے دوست