سسرالیوں نے بہو پر ظلم کے پہاڑ توڑ دئیے,شادی کے پانچ ماہ بعد شوہر بیرون ملک چلا گیا، دیور نے زیادتی کرکے حاملہ کر دیا۔

سسرالیوں نے بہو پر ظلم کے پہاڑ توڑ دئیے، شادی کے پانچ ماہ بعد شوہر بیرون ملک چلا گیا، دیور نے زیادتی کر ڈالی، حاملہ ہونے پر دودھ میں زہریلی چیز پلادی اور طبیعت خراب ہونے پر والدین کے گھر چھوڑ گئے، سٹام پیپروں پر زبردستی انگوٹھے لگوالئے، سسرال والے زبان کھولنے پر جان سے مارنے کی دھمکیاں دیتے ہیں بوڑھے والدین کی انصاف کے لئے دہائی۔ تفصیل کے مطابق گکھڑ کے نواحی گاؤں بھٹی منصور کے رہائشی مستری محمد بوٹا کی بیٹی کائنات کی شادی چک ستیاں وزیرآباد لاوڈ کی پلی کے رہائشی مستری محمد یونس کے بیٹے عبدالحمید کے ساتھ 9ماہ قبل ہوئی شادی کے پانچ ماہ بعد عبدالحمید سعودی عرب چلا گیا، عبدالحمید کے بیرون ملک چلے جانے کے بعد کائنات کی نندوں رضیہ اور گوگی نے بھائیوں کے ساتھ مل کر کائنات کو تشدد کا نشانہ بنایا اور دیور تنویر عرف کاکا نے کائنات کے ساتھ زبردستی زیادتی کر ڈالی، ساس اور سسر کو بتانے پر انہوں نے زبان بند رکھنے کو کہا اور حاملہ ہونے پر دودھ میں زہریلی چیز ملا کر پلادی.

جس سے حالت غیر ہونے پر اشٹام پیپروں پر انگوٹھے لگواکر والدین کے گھر پھینک گئے، کئی روز گزرنے کے بعد بھی کائنات کی حالت سنبھل نہ سکی۔روزنامہ خبریں کے مطابق کائنات کا کہنا ہے کہ میرا شوہر بھی مجھے فون پر دھمکاتا ہے اور سسرال والے بھی زبان کھولنے پر جان سے مارنے کی دھمکیاں دیتے ہیں۔ کائنات کے والدین کا کہنا ہے کہ ہماری بیٹی کے ساتھ بہت ظلم ہوا ہے ہم وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف سے انصاف کی اپیل کرتے ہیں۔سسرالیوں نے بہو پر ظلم کے پہاڑ توڑ دئیے، شادی کے پانچ ماہ بعد شوہر بیرون ملک چلا گیا ، دیور نے زیادتی کر ڈالی، حاملہ ہونے پر دودھ میں زہریلی چیز پلادی اور طبیعت خراب ہونے پر والدین کے گھر چھوڑ گئے، سٹام پیپروں پر زبردستی انگوٹھے لگوالئے، سسرال والے زبان کھولنے پر جان سے مارنے کی دھمکیاں دیتے ہیں بوڑھے والدین کی انصاف کے لئے دہائی۔