وہ 10کام جو موبائیل فون چارج کرتے وقت کسی صورت بھی قابلِ قبول نہیں ہیں


وہ 10کام جو موبائیل فون چارج کرتے وقت کسی صورت بھی قابلِ قبول نہیں ہیں
اُردو آفیشل۔ تمام طرح کی بیٹریوں کی ایک عمر ہوتی ہے جس کے بعد وہ ناکارہ ہو جاتی ہیں۔ اسی طرح موبائل فون کی بیٹری کی بھی ایک عمر ہے، لیکن آپ اس بیٹری کا بہتر طریقے سے استعمال کرکے اس کی عمر میں خاطرخواہ اضافہ کر سکتے ہیں۔ ویب سائٹ gadgetsnow.comنے اپنی ایک رپورٹ میں 10ایسے کام بتائے ہیں جو موبائل فون صارفین کو بیٹری چارج کرتے ہوئے ہرگز نہیں کرنے چاہئیں کیونکہ اس سے ان کی بیٹری کی عمر میں کمی واقع ہو سکتی ہے۔یہ دس کام مندرجہ ذیل ہیں۔
اپنے فون کو ہمیشہ اس کے اصل چارجر کے ساتھ ری چارج کریں
غیرمعروف کمپنیوں کے سستے چارجر ہرگز استعمال نہ کریں
عموماً لوگ موبائل فون کی حفاظت کے لیے ان کے اوپر پلاسٹک وغیرہ کے کور(Cover)چڑھا لیتے ہیں۔ کوشش کریں کہ بیٹری چارج کرنے سے قبل یہ کور اتار دیں۔ اس طرح بیٹری زیادہ گرم نہیں ہو گی۔
تیزی سے بیٹری چارج کرنے والے چارجر استعمال کرنے سے گریز کریں۔ ہمیشہ وہ چارجر استعمال کریں جو سست بیٹری چارج کرتا ہو۔
کبھی بھی فون کو تمام رات چارجر پر لگا کر مت رکھیں
کبھی بھی تھرڈ پارٹی بیٹری ایپلی کیشنز استعمال نہ کریں۔
موبائل فون کو ہمیشہ اس وقت تک چارجر کے ساتھ لگا رہنے دیں جب تک اس کی بیٹری کم از کم 80فیصد تک چارج نہ ہو جائے۔
بیٹری کو اس وقت دوبارہ چارج کریں جب وہ 20فیصد یا اس سے کم رہ جائے۔
اگر آپ پاور بینک استعمال کرتے ہیں تو ان کمپنیوں کے پاوربینک خریدیں جو وولٹیج اچانک کم یا زیادہ نہ ہونے، شارٹ سرکٹ اور اوورچارجنگ نہ ہونے کی گارنٹی دیتی ہوں۔
جب آپ کا فون پاوربینک سے منسلک ہو تب اسے استعمال کرنے سے گریز کریں۔

دلچسپ عنوان
  ’برمودا ٹرائی اینگل میں جاکر بڑے بڑے بحری جہاز بھی اچانک غائب کیوں ہوجاتے ہیں؟‘ بالآخر معمہ حل ہوگیا، اصل وجہ سامنے آگئی