نا معلوم شخص کی اینکر پرسن پر قاتلانہ حملے کی کوشش، مزاحمت پر گاڑی کھمبے سے جاٹکرائی، خاتون شدید زخمی


نجی ٹی وی کی اینکر پرسن عظمیٰ خان پر قاتلانہ حملے کی کوشش کی گئی تاہم مزاحمت پر ان کی گاڑی کا توازن بگڑ گیا اور وہ کھمبے سے جا ٹکرائی جس کے باعث خاتون اینکر کے ہاتھ،پاؤں اور ماتھے پر شدید زخم آئے ہیں۔
تفصیلات کے مطابق اینکر پرسن و عظمیٰ خان پروڈکشن کی سی ای او عظمیٰ خان قصور سے لاہور آرہی تھیں کہ اسی دوران ان پر قاتلانہ حملے کی کوشش کی گئی ۔ قصور سے لاہور واپسی پر ایک نامعلوم کار ڈرائیور نے ان کی گاڑی کو روکنے کی کوشش کی تاہم عظمیٰ خان نے مزاحمت کی جس سے ان کی گاڑی کا توازن بگڑ گیا اوروہ سڑک کے کنارے لگے کھمبے سے جا ٹکرائی۔

گاڑی کھمبے سے ٹکرانے کے باعث عظمیٰ خان کو شدید چوٹیں آئیں اور انہیں قصور کے ایک نجی ہسپتال میں منتقل کر دیا گیا جہاں انہیں ابتدائی طبی امداد دینے کے بعد گھر بھیج دیا گیا ہے۔ عظمیٰ خان کے ہاتھ اور پاؤں پر فریکچر ہے جبکہ ان کی پیشانی پر بھی زخم آئے ہیں۔ پولیس نے واقعے کا مقدمہ درج کرکے ملزم کی تلاش شروع کردی ہے تاہم ابھی تک حملہ آور کی شناخت نہیں ہوسکی۔

واضح رہے کہ گزشتہ ہفتے ایک سٹیج اداکارہ کو بھی موٹر سائیکل سواروں نے گولیاں مار کر جاں بحق کردیا تھا جس کی تحقیقات میں انکشاف ہوا ہے کہ قسمت بیگ کو پیشہ ورانہ تلخیوں کے باعث نشانہ بنا یا گیا ۔

You cannot copy content of this page