جو مرد یہ ایک کام کرتے ہیں وہ خواتین کیلئے جنسی اعتبار سے زیادہ کشش رکھتے ہیں

(اسلام آباد(اردو آفیشل 30 جولائی 2017) مغربی معاشرے میں داڑھی کی اہمیت اور مقبولیت کے بارے میں عمومی باتیں جو عرصے سے کی جا رہی تھیں مگراب ایک باقاعدہ تحقیق میں بھی معلوم کر لیاگیا ہے کہ خواتین داڑھی والے مردوں کو نسبتاً زیادہ، بہادر، باہمت، دلیر اور دلکش سمجھتی ہیں اور خصوصاً انھیں مردانہ طاقت کے لحاظ سے بھی برتر سمجھتی ہیں. یونیورسٹی آفویسٹرن آسٹریلیا کے سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ ہر قسم کے جانوروں میں نرخود کو ممتاز کرنے کیلئے خصوصی طریقہ استعمال کرتے ہیں.

کچھ جانوروں میں بڑی ناک اور بعض میں‌ بڑی طاقت اور رتبے کی علامت سمجھی جاتی ہے. جانوروں کی طرح انسانوں میں بھی مردانہ جنس کے ارکان صنف مخالف کی نظر میں اہمیت چاہتے ہیں. اس تحقیق کے مطابق انسانی ارتقاء کے دوران صنف نےداڑھی والے مردوں‌کو جنسی اورجسمانی دلکشی کا حامل سمجھا اور یہی وجہ ہے کہ داڑھی کو لاشعوری طور پر طاقت اورعظمت کی علامت سمجھا جاتا ہے تحقیق کےسربراہ ڈاکٹر لیرل گروٹر کا کہنا ہے کہ مغربی معاشرے کی خواتین ایک مدت تک کلین شیو مردوں کے غلبے میں رہی ہیں مگر آج کے دور میں ان کی توجہ داڑھی والے مردوں‌کی طرف زیادہ مرکوز ہوتی ہے.