سعودی اتحادی طیاروں کا یمن پر حملہ:بچوں سمیت 19 افراد ہلاک


صنعا(ویب ڈیسک )سعودی سربراہی میں قائم عسکری اتحاد کی طرف سے یمن میں بمباری کے نتیجے میں کم از کم 19 ہلاک ہو گئے ہیں۔ یہ بات یمنی حکام کی طرف سے بتائی گئی ہے۔حکام کے مطابق ملک کے مغربی حصے میں متاثرہ افراد بظاہر جنگ سے بچنے کے لیے وہاں سے فرار ہونے کی کوشش کر رہے تھے جب ان کی گاڑی بمباری کا نشانہ بنی
۔ بتایا گیا ہے کہ زخمیوں میں خواتین اور بچے بھی شامل ہیں اور ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ہے۔دوسری طرف اقوام متحدہ نے کہا ہے کہ سعودی اتحاد نے دارالحکومت صنعاء کے لیے اقوام متحدہ کی ایک پرواز کو روک دیا ہے۔ یاد رہے کہ صنعاء کا ہوائی اڈہ حوثی باغیوں کے قبضے میں ہے اوریہ جہاز دارالحکومت سے امدادی کارکنوں اور بعض اخباری نمائندوں کو واپس لینے کے لیے جا رہا تھا۔سعودی سربراہی میں قائم عسکری اتحاد کی طرف سے یمن میں بمباری کے نتیجے میں کم از کم 19 ہلاک ہو گئے ہیں۔ یہ بات یمنی حکام کی طرف سے بتائی گئی ہے۔حکام کے مطابق ملک کے مغربی حصے میں متاثرہ افراد بظاہر جنگ سے بچنے کے لیے وہاں سے فرار ہونے کی کوشش کر رہے تھے جب ان کی گاڑی بمباری کا نشانہ بنی۔ بتایا گیا ہے کہ زخمیوں میں خواتین اور بچے بھی شامل ہیں اور ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ہے۔دوسری طرف اقوام متحدہ نے کہا ہے کہ سعودی اتحاد نے دارالحکومت صنعاء کے لیے اقوام متحدہ کی ایک پرواز کو روک دیا ہے۔ یاد رہے کہ صنعاء کا ہوائی اڈہ حوثی باغیوں کے قبضے میں ہے اوریہ جہاز دارالحکومت سے امدادی کارکنوں اور بعض اخباری نمائندوں کو واپس لینے کے لیے جا رہا تھا۔

You cannot copy content of this page