رام رحیم کی خفیہ غار کی تصاویر بھی منظرعام پر آ گئیں


2خواتین سے زیادتی کے جرم میں 20 سال کیلئے قید کی سزا پانے والے نام نہاد مذہبی رہنماءرام رحیم کی اس خفیہ ”گفا“ (غار) کی تصاویر بھی منظرعام پر آ گئی ہیں اور اس میں پرتعیش چیزیں اور اس کا شاہانہ طرز زندگی دیکھ کر ہی بھارتیوں کے سینوں پر سانپ لوٹ گیا ہے۔بھارتی خبر رساں ادارے نے ناصرف اس کے ڈیرے ”سچا سودا“ میں واقعہ خفیہ غار میں موجود کمرے کی تصاویر اور ویڈیوز جاری کی ہیں بلکہ ان کی مہنگی ترین گاڑیاں بھی دکھائی ہیںجسے دیکھ کر اندازہ ہوتا ہے کہ وہ کس قدر امیر‌کبیر شخص تھا اور کیسے لوگوں کے پیسوں پر عیش کر رہا تھا۔بھارتی میڈیا کی جانب سے جاری کی گئی ویڈیو کا ایک کلپ ملاحظہ کریں
https://www.facebook.com/Noownews/videos/506417859710600/
دریں اثنا اس سے پہلے گرو رام سنگھ کے داماد وشواس گپتا نے اپنے سسر پر انتہائی شرمناک الزام عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ بابا رام کے اپنی منہ بولی بیٹی اور میری بیوی پریانکا تینجا عرف ہنی پریت سے ناجائز تعلقات تھے ، جبکہ وہ جیل میں بھی اپنے ساتھ اپنی اسی منہ بولی بھی اپنے ساتھ اپنی اسی منہ بولی بیٹی اور میری بیوی کو اپنے ساتھ رکھنا چاہتا تھا جبکہ پولیس کے انکار پر اس نے اعلیٰ جیل افسران کو سنگین نتائج کی دھمکیاں بھی دیں تھیں۔بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق ریپ کے جرم میں 20سال قید کی سزا پانے والے گرو رام رحیم سنگھ کے بارے نت نئے شرمناک انکشاف ہو رہے ہیں ،اب بابارام کے داماد وشواس گپتا نے اپنے سسر پر الزام عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ گرو رام کے

اپنی منہ بولی بیٹی پریانکا عرف ہنی پریت کے ساتھ ناجائز تعلقات تھے اور ایک مرتبہ میں نے ان دونوں باپ بیٹی کو انتہائی شرمناک حالت میں بابا گرو رام کے ذاتی بیڈ روم میں رنگے ہاتھوں بھی پکڑا تھا لیکن بابا رام نے اس بات کے بارے میں کسی کے ساتھ ذکر کرنے پر مجھے جان سے مارنے کی دھمکیاں دیتے ہوئے کہا تھا کہ اگر میں نے اس بات کا کسی سے بھی ذکر کیا تو وہ دوسرے ہی لمحے مجھے مروا دے گا ۔وشواس گپتا کا کہنا تھا کہ بابا گرو رام کے میری بیوی کے ساتھ میری شادی سے پہلے ہی ناجائز تعلقات تھے اور انہی ناجائز تعلقات کو چھپانے کے لئے اس نے ہنی پریت کو سب کے سامنے اپنی منہ بولی بیٹی قرار دیا تھا تاکہ لوگوں کی آنکھوں میں دھول جھونک سکے ۔وشواس گپتاکا کہنا تھا کہ 1999ء میں میری پریانکا عرف ہنی پریت سے باباگرو رام کی موجودگی میں شادی ہوئی ۔

ایک بار میں بابا گرو رام کے گھر رکا ہوا تھا ،میری بیوی ان کے ساتھ تھی ، غلطی سے میں نے ان کے کمرے کا دروازہ کھولا تو وہ دونوں بستر پر انتہائی قابل اعتراض حالت میں تھے ،مجھے دیکھ کر وہ دونوں چونک گئے جبکہ بابا رام نے اس’’ حالت ‘‘کے بارے میں کسی کے ساتھ ذکر پر مجھے قتل کی دھمکیاں بھی دیں جبکہ میں پہلے ہی ڈرا سہما ہوا تھا جس پر خاموشی اختیار کر لی ۔دوسری طرف کہا جا رہا ہے کہ گرو رام رحیم کی جیل یاترا کے بعد پریانکا تیجا عرف ہنی پریت ہی سچا سودا کی وراثت اور جانشین ہیں ۔وشواس گپتا کا کہنا تھا کہ اگر بابا گرمیت رام میری بیوی کو حقیقی میں اپنی بیٹی سمجھتے ہیں تو پھر مجھے اس سے دور کیوں رکھتے ہیں ؟وشواس گپتا نے یہ الزام بھی عائد کرتے ہوئے کہا کہ جب رام رحیم ہوٹلوں میں جاتے ہیں تو مجھے برابر والے کمرے میں بھیج دیا جاتا تھا اور میری بیوی ہنی پریت کو رات اپنے کمرے میں اپنے ساتھ ہی رکھتے تھے ۔اب ان کے الزامات میں کتنی سچائی ہے یہ تحقیقات ہونے پر ہی پتہ چلے گا۔

You cannot copy content of this page